28

ملکہ برطانیہ کی موت کی وجہ کیا تھی؟ ڈیتھ سرٹیفکیٹ سامنے آگیا

ملکہ الزبتھ دوم کی موت سے 2 دن قبل لی گئی آخری تصویر / اے پی فوٹو
ملکہ الزبتھ دوم کی موت سے 2 دن قبل لی گئی آخری تصویر / اے پی فوٹو

برطانیہ کی آنجہانی ملکہ الزبتھ دوم کا انتقال 8 ستمبر کو ہوا تھا اور اب ان کی موت کی وجہ سامنے آگئی ہے۔

ملکہ الزبتھ دوم کا ڈیتھ سرٹیفکیٹ 29 ستمبر کو جاری کیا گیا۔

96 سالہ ملکہ کا انتقال 8 ستمبر کو سہ پہر 3 بج کر 10 منٹ کو بالمورال کیسل میں ہوا تھا جبکہ عوام کو اس بارے میں 3 گھنٹوں کے بعد آگاہ کیا گیا۔

نیشنل ریکارڈز آف اسکاٹ لینڈ نے ڈیتھ سرٹیفکیٹ جاری کیا جس میں ملکہ الزبتھ دوم کی موت کی وجہ کوئی بیماری نہیں بلکہ ‘بڑھاپے’ کو قرار دیا گیا ہے۔

ڈیتھ سرٹیفکیٹ / فوٹو بشکریہ ڈیلی میل
ڈیتھ سرٹیفکیٹ / فوٹو بشکریہ ڈیلی میل

اس سرٹیفکیٹ سے یہ بھی انکشاف ہوتا ہےکہ الزبتھ دوم کے انتقال کے موقع پر ملکہ کے پاس صرف موجودہ بادشاہ چارلس اور ان کی بہن شہزادی این موجود تھے۔

شہزادہ ولیم، شہزادہ اینڈریو، شہزادہ ایڈورڈ اور ان کی اہلیہ ملکہ کے انتقال کے وقت وہاں پہنچنے کے لیے طیارے پر سفر کررہے تھے۔

خیال رہے کہ اس سے قبل ملکہ کے شوہر شہزادہ فلپ کے ڈیتھ سرٹیفکیٹ میں بھی موت کی وجہ بڑھاپا ہی لکھی گئی تھی۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں