23

گوادر: مظاہرین اور حق دو تحریک کے سربراہ مولانا ہدایت الرحمان پر قتل کا الزام،حکومتی ترجمان کا بیان سامنے آگیا

کوئٹہ (گدروشیاپوائنٹ)گوادر میں حق دو تحریک کے مشتعل مظاہرین کی اشتعال انگیزی جاری ۔ترجمان صوبائی حکومت
۔مشتعل مظاہرین نے فائرنگ کرکے پولیس اہلکار کو شہید کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق بلوچستان صوبائی حکومت کے ترجمان فرح عطیم شاہ نے کہا ہے کہ گوادر میں حق دو تحریک کے رہنما کے حکم پرسیکیورٹی پر معمور پولیس اہلکار پر براہ راست فائرنگ کی گئی جس سے شہید اہلکار کی گردن پر گولی لگی۔ترجمان نے کہا کہ
اہلکار کو فوری طور پر جی ڈی اے اسپتال منتقل کیا گیا جہاں زخم کی تاب نہ لاتے ہوۓ اہلکار شہید ہوگیا۔انہون نے
واقعہ کو افسوسناک قرار دیا ،اس کی سخت مزمت کی ۔انہوں نے کہا کہ پولیس فورس مظاہرین کی اشتعال انگیزی صبر وتتحمل سے برداشت کر رہی ہے ۔انہوں نے کہا کہ مولانا ہدایت الرحمان کے خلاف پولیس اہلکار کی شہادت پر ایف آئی آر درج کی جاۓ گی ۔ انہوں نے کہا کہ
سول سوسائٹی اورگوادر کے پر امن شہریوں کی جانب سے بھی حق دو تحریک کے طرز عمل اور بلاجواز اشتعال انگیزی کی مزمت کی جا رہی ہے ۔ایسے واقعات ناقابل برداشت ہیں جسکی تمام تر زمہ داری مولانا ہدایت الرحمان اور انکے حواریو ں پر عائد ہوتی ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں